ایران کی آیت اللہ علی خامنہ ای کی توہین پر چارلی ہیبڈو کیخلاف انتقامی کارروائی کی دھمکی

75

فرانسیسی میگزین چارلی ہیبڈو میں رہبر اعلیٰ آیت آللہ علی خامنہ ای کے توہین آمیز خاکوں کی پوری سیریز جاری کرنے پر ایران اور فرانس کے تعلقات میں کشیدگی میں پیدا ہوگئی۔چارلی ہیبڈو میگزین کی جانب سے ایران کی اعلیٰ سیاسی شخصت اور مذہبی رہنما کی توہین پر ایران کے اعلیٰ حکام بشمول صدر، وزیر خارجہ اور جنرلز کی جانب سے مذمتی بیانات سامنے آئے ہیں جب کہ تہران میں واقع فرانسیسی سفارت خانے کے سامنے شدید مظاہرہ بھی کیا گیا ہے۔ایرانی پاسداران انقلاب کے سربراہ جنرل حسین سلامی نے اپنے بیان میں کہا کہ ’مسلمان ’جلد یا تاخیر‘ چارلی ہیبڈو سے انتقام ضرور لیں گے۔میجر جنرل حسین سلامی نے زاہدان میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ چارلی ہیبڈو میگزین کے مالک کو سلمان رشدی کا انجام یاد رکھنا چاہیے، جس نے 33 برس قبل رسول اکرم (صلی الله علیه وآلہ وسلم) اور قرآن مجید کی توہین کرنے کی جسارت کی اور یورپ میں روپوش ہوگیا لیکن کئی برس بعد بھی ایک بہادر نوجوان اٹھا اور سلمان رشدی سے انتقام کیا اور اس وقت اسے بچانے والا کوئی نہیں تھا۔

مزید پڑھیں:  روسی صحافی نے یوکرینی بچوں کی امداد کیلئے نوبیل انعام بیچ دیا
جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.