میٹا کے پلیٹ فارم پر 21 سالہ لڑکی کے ساتھ دنیا کا پہلا ورچوئل ریپ

19

امریکی ٹیکنالوجی جائنٹ میٹا کے ورچوئل پلیٹ فارم پر 21 سالہ لڑکی کے ساتھ زیادتی کا کیس رپورٹ کیا گیا ہے۔

برطانوی خبر رساں ادارے کے مطابق مطابق ورچوئل ریئلٹی پلیٹ فارم ہورائزن ورلڈز پر اکیس سالہ ریسرچر کے اوتار ( کمپیوٹر پر بنائی گئی ایک فرضی کردار کی تصویر) کے ساتھ جنسی زیادتی کی گئی۔

اس وی آر پلیٹ فارم پر تحقیقی کام کرنے والے کارپوریٹ اکاؤنٹیبلیٹی گروپ ’ سم آف اس‘ کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ لڑکی کے اوتار سے ساتھ زیادتی سے ظاہر ہوتا ہے کہ میٹا ورس میں بھی اس طرح کے واقعات کو روکنے کے لیے بہتر منصوبہ بندی ضروری ہے۔

کمپنی کے ترجمان نے بی بی سی کو بتایا کہ ہماری کمپنی چاہتی ہے کہ ہورائزون ورلڈ میں ہر کسی کو حفاظتی طریقہ کار کے تحت رسائی فراہم کرتے ہوئے ہمیں تفتیش کرنے اور ذمے داران کے خلاف کارروائی کرنے میں مدد مل سکے۔

یادرہے کہ ورچوئل پلیٹ فارم ہوئرازن ورلڈ اس وقت صرف کینیڈا اور امریکا کے صارفین کے لیے دست یاب ہے، جس کے اوتار بہت سادہ اور کارٹون کی شکل و صورت رکھتے ہیں۔

کمپنی کے کمپین ڈائریکٹر وکی وائٹ نے بی بی سی کو بتایا کہ لڑکی کے اوتار پر حملہ صدمے کا سبب ہے اور اور اس کے دوسرے استعمال کنندگان پر اثرات مرتب ہوں گے۔

بی بی سی کو موصول ہونے والی فوٹیج میں دیکھا جاسکتا ہے کہ ریسرچر کے کمرے میں دو مرد اوتار موجود ہیں، جن میں سے ایک اطراف کا جائزہ لے رہا ہے جب کہ دوسرا لڑکے نزدیک ہے۔ یہ دونوں افراد آپس میں نامناسب تبصرے کرتے ہوئے ایک دوسرے کے ساتھ شراب کی ورچوئل بوتلیں بھی شیئر کر رہے ہیں۔

مزید پڑھیں:  جدید ترین کیمرا ٹیکنالوجی کے ساتھ اوپو کی نئی سیریز لانچنگ کے لیے تیار

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.