برطانیہ میں دو سال بعد ’چیز رولنگ‘ مقابلے کا انعقاد

لندن(تکبیر نیوز)کووڈ کی باعث دوسالہ وقفے کے بعد اب برطانیہ میں دوبارہ پنیر کے ساتھ انسانوں کے لڑھکنے کا کھیل شروع ہوگا جسے ’چیز رولنگ‘ کہا جاتا ہے۔

60

1826 سے انگلینڈ کے پرفضا اور سرسبز مقام پر ہر سال ایک مقابلہ ہوتا رہا ہے جس میں پنیر کے ٹکڑے کو گول پہیئے کی طرح ڈھلوانی پہاڑ سے لڑھکایا جاتا ہے اور لوگ اس کے تعاقب میں بھی دوڑتے ہیں۔ اس دوران نوجوان زخمی ہوتے، رگڑتے ہیں اور لڑھکتے ہیں۔ تاہم اسے دیکھنے کے لئے ہزاروں افراد ہرسال یہاں آتے ہیں۔ اب یہ مقابلہ آج بروز اتوار5 جون کو ہورہا ہے۔گلوکیسٹر شہر کے باہر سرسبز کوپرز ہل کی انتہائی بلند حصے سے چار کلوگرام وزنی پنیر گول کرکے لڑھکایا جائے گا اسی کے ساتھ 200 فٹ ڈھلان پر من چلے بھی دوڑ لگائیں گے۔ ڈھلوان پر نیچے کے جانب سیدھا کھڑا ہوکر دوڑنا محال ہوتا ہے اور لوگ گرکرلڑھکتے ہوئے نیچے جاتے ہیں۔دلچسپ بات یہ ہے کہ مقامی رگبی کلب کے تربیت یافتہ کھلاڑی نیچے کھڑے ہوتے ہیں اور انہیں ’تھامنے والا‘ کہا جاتا ہے کیونکہ یہ اوپر سے لڑھک کر نیچے آنے والے لوگوں کو سنبھالتے ہیں۔ یوں کئی افراد شدید چوٹوں سے بچ جاتے ہیں۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ پنیر کا گول ڈبہ 70 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے نیچے جاتا ہے اور انسان اس کا ساتھ نہیں دے پاتا۔ تاہم پنیر کے بعد نیچے پہنچنے والے سب سے پہلے کھلاڑی کو فاتح قرار دیا جاتا ہے۔

مزید پڑھیں:  ٹرک سے برآمد 50 لاشوں کو شناخت کرلیا گیا
جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.