پیٹرولیم مصنوعات میں اضافہ، ٹرانسپورٹرز نے کرایوں میں 40 فیصد اضافے کا اعلان کر دیا

15

پیٹرولیم مصنوعات میں اضافے کے بعد گڈز ٹرانسپورٹرز نے کرایوں میں 40 فیصد اضافے کا اعلان کر دیا ہے۔

جنرل سیکرٹری نبیل طارق نے کہا کہ آئے روز پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے سے کارروبار ٹھپ ہو کر رہ گئے ہیں۔

پیٹرول اور ڈیزل کی قیمت میں اضافے کے بعد ٹرانسپوٹرز نے لاہور سے کراچی کا کرایہ 80 ہزار روپے سے بڑھا کر ایک لاکھ دس ہزار روپے کر دیا۔

لاہور سے اسلام آباد کا کرایہ 60 ہزار سے 80 ہزار روپے، لاہور سے پشاور کا کرایہ 75 ہزار سے بڑھا کر ایک لاکھ روپے جبکہ مانسہرہ کا کرایہ 55 ہزار سے بڑھا کر 70 ہزار روپے کر دیا گیا۔

 اس کے علاوہ لاہور سے ملتان کا کرایہ 40 ہزار سے بڑھا کر 50 ہزار  اور لاہور سے کوئٹہ کا کرایہ ایک لاکھ دس ہزار سے بڑھا کر ایک لاکھ 40 ہزار روپے کر دیا گیا۔

جنرل سیکرٹری نبیل طارق نے کہا کہ حکومت کو ہوش کے ناخن لینے چاہیے کارروبار بند ہو گئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ کرایوں میں اضافے کا اعلان پیٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں اضافے کے بعد کیا گیا ہے، ہمارے لیے اس قیمت میں گڈز کی ترسیل نہ ممکن تھا۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز اتحادی حکومت کی جانب سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں تیسری مرتبہ اضافہ کردیا گیا۔ پیٹرول 24 اور ڈیزل 59 روپے لیٹر مہنگا ہوگیا جس کے بعد  پیٹرول کی نئی قیمت 233.89 روپے، ڈیزل 263.31 روپے، مٹی کا تیل 211.43 روپے اور لائٹ ڈیزل آئل کی نئی قیمت 207.47 روپے ہوگئی ہے۔۔

مزید پڑھیں:  این اے 45 کرم؛ ضمنی انتخاب کیلئے پولنگ کا وقت ختم ،ووٹوں کی گنتی جاری

 

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.