پنجاب  کابینہ نے  مالی سال 2022-23 کے بجٹ کی منظوری دے دی

14

وزیر اعلیٰ حمزہ شہباز نے پنجاب کابینہ اجلاس میں آئندہ مالی سال 2022-2023 کے بجٹ کی منظوری دے دی۔

وزیراعلیٰ حمزہ شہباز کی زیر صدارت آج صوبائی کابینہ کا اجلاس ہوا۔

یاد رہے کہ پنجاب کیلئے 3 ہزار 226 ارب روپے کا بجٹ آج پیش کیا جائےگا۔

وزارت خزانہ کا قلمدان کسی کے پاس نہ ہونے کے باعث صوبائی وزیر اویس لغاری بجٹ پیش کریں گے، بجٹ میں صوبائی ملازمین کی تنخواہوں میں 15 فیصد اور پنشن میں پانچ فیصد اضافہ ہو گا۔

 پنجاب میں ترقیاتی بجٹ کیلئے 685 ارب کی خطیر رقم مختص کی گئی ہے جبکہ 200 ارب روپے سستے گھی، چینی اور آٹے کی فراہمی پر خرچ کیے جائیں گے۔

صوبائی بجٹ میں ملازمین کی تنخواہوں میں 15 فیصد اور پنشن میں 5 فیصد اضافے کی تجویز ہے۔

صوبائی کابینہ نے کینسر کے مریضوں کو مفت ادویات کی فراہمی کیلئے ایم او یو کی منظوری دی۔

اس حوالے سے وزیر اعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز نے کہا کہ صوبائی وزراء، چئیرمین پی اینڈ ڈی، سیکرٹری خزانہ اور متعلقہ حکام نے دن رات محنت کر کے بہترین بجٹ دستاویز تیار کی ۔

 انکا کہنا تھا کہ بجٹ میں صوبے کے عوام کو حقیقی معنوں میں ریلیف دینے کیلئے اقدامات تجویز کئے گئے ہیں۔

حمزہ شہباز نے کہا کہ میں ہمیشہ مشاورت پر یقین رکھتا ہوں، یہ بجٹ سیاسی و انتظامی ٹیم کی مشاورت سے تیار کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ اجلاس میں پنجاب کابینہ کے پہلے اجلاس کے فیصلوں کی توثیق کی گئی جبکہ اجلاس میں صوبائی وزراء، چیف سیکرٹری اور متعلقہ محکموں کے سیکرٹریز  نے شرکت کی۔

مزید پڑھیں:  کراچی میں فینسی نمبر پلیٹس اور ہوٹرز پر پابندی عائد

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.