پاکستان میں روسی سفیرکاعمران حکومت سے متعلق بڑا انکشاف

19

پاکستان میں روسی سفیر ڈینئل  گنیش نے عمران حکومت سے متعلق بڑا انکشاف کیا ہے۔

نجی نیوز چینل کو انٹرویو میں روسی سفیر ڈینئل گنیش نے کہا کہ دورہ روس عمران خان حکومت کے گرنے کی وجہ بنی۔

انکا کہنا تھا کہ عمران خان کا ماسکو میں ہونا اور یوکرین پر حملہ ایک اتفاق ہے، اگر عمران خان کو پتا ہوتا تو اس دن کبھی نہ آتے، عمران خان بنیادی طور پر ایک ایماندار آدمی ہے اور وہ اپنے لوگوں کی بہتری چاہتے ہیں۔

روسی صدر ولادیمیر پیوٹن کا بیماری میں مبتلا ہونے سے متعلق سوال پر ڈینئل گنیش نے کہا کہ صدر پیوٹن خیریت سے ہیں اور اپنے کام کر رہے ہیں، میں مغربی میڈیا کی روس کے حوالے سے خبروں پر کبھی یقین نہیں کرتا۔

روس اور یوکرین جنگ کے حوالے سے سوال پرروسی سفیر نے کہا کہ روس کو نیٹو کی نقل و حرکت پر تشویش تھی، ہمارے بارڈر پر نیٹو کی نقل و حرکت یوکرین جنگ کی وجہ بنی۔

ان کا کہنا تھا کہ یوکرین نے نیٹو میں شمولیت کا اعلان کیا، یوکرین کی نیٹو میں شمولیت ہماری خود مختاری پر حملہ تھا، نیٹو کی روس کی سرحدوں پر نقل وحرکت شروع ہوگئی تھی جو ہمارے لیے خطرہ تھی۔

دو روز قبل کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے روسی قونصل جنرل آندرے فیڈروف نے کہا تھا کہ پاکستان حکومت رابطہ کرے گی تو ہم سستا تیل فراہم کریں گے۔

قونصل جنرل کا کہنا تھا کہ سستا تیل خریدنے کے لیے پاکستان کی جانب سے کوئی سرکاری خط موصول نہیں ہوا، روس پر پابندیاں پاکستان سے تجارتی تعلقات کو متاثر کرسکتی ہیں۔

مزید پڑھیں:  کسی کودھوکہ دیا،نہ ہی ن لیگ کودوں گا،آصف زرداری

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.