ماحولیاتی تبدیلی: بھارت کا دھواں چھوڑنے والی گاڑیوں کو سڑکوں سے ہٹانے کا منصوبہ

18

ماحولیاتی تبدیلوں کے باعث بھارت نے لاکھوں دھواں چھوڑنے والی گاڑیوں کو سڑکوں سے ہٹانے کا منصوبہ بنایا ہے۔

بھارت میں ایک سروے کیا گیا جس کے مطابق تقریباً 57 فیصد گاڑی مالکان کا کہنا ہے کہ گاڑیوں کو سڑکوں سے ہٹائے جانے کا انحصار گاڑیوں کی عمر کے بجائے ان کے طے کیے گیے سفر پر ہونا چاہیے۔

سروے میں نصف سے زیادہ صارفین نے کہا کہ وہ اپنی گاڑیوں کی تعداد کو کم کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں کیونکہ کلنکرز پالیسی (دھواں چھوڑنے والی گاڑیوں سے متعلق پالیسی) کے تحت پرانی گاڑیاں رکھنا اب زیادہ مہنگا ہو جائے گا۔

یاد رہے بھارتی حکومت نے پچھلے سال یہ لازمی قرار دیا تھا کہ 20 سال سے زائد پرانی ذاتی گاڑیوں اور 15 سال سے زائد پرانی کمرشل گاڑیوں کو سڑک پر لانے کے لیے فٹنس ٹیسٹ لازمی کروانا ہو گا۔

واضح رہے کہ بھارت نے رواں برس اپریل سے آٹو فٹنس ٹیسٹ کو مزید مہنگا کر دیا جس کے تحت 15 سال سے زائد پرانی گاڑیاں رکھنے والوں کو اب اپنی رجسٹریشن کی تجدید کے لیے 8 گنا زیادہ فیس ادا کرنی ہو گی۔

بھارت کے سینٹر فار سائنس اینڈ انوائرمنٹ کی پیش گوئی کے مطابق 2025 تک بھارت میں 20 ملین پرانی گاڑیاں اپنی عمر کے خاتمے کے قریب ہوں گی جس سے ماحولیات کو بہت زیادہ نقصان پہنچے گا۔

مزید پڑھیں:  معاشرے کے کمزور طبقے کی مشکلات کم کرنے کے لیے سبسڈی دیں گے: وزیر اعظم
جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.