آسٹریلیا، تاریخ میں پہلی بار دو مسلمان وزرا کابینہ کا حصہ بن گئے

30

آسٹریلوی کابینہ کی تاریخ میں پہلی بار دو مسلمان وزرا شامل ہوگئے ہیں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق آسٹریلیا کی نئی حکومت نے حلف اٹھایا جس میں تیرہ خواتین اور تاریخ میں پہلی بار 2 مسلمان وزرا  آسٹریلوی وفاقی کابینہ کا حصہ بن گئے۔

جاری کردہ میڈیا رپورٹس کے مطابق گورنر جنرل ڈیوڈ ہرلی کی زیر صدارت حلف برداری کی تقریب کا انعقاد آسٹریلوی دارالحکومت کینبیرا میں ہوا جس میں منتخب وزیر اعظم انتھونی البانیس اور ان کی کابینہ کے ارکان نے شرکت کی۔30 رکنی نئی  آسٹریلوی کابینہ میں پہلی بار 2 مسلمان وزرا ایڈ ہیوزک اور خاتون این ایلی شامل ہیں۔

اس تناظر میں ایڈ ہیوزک کا کہنا تھاکہ کابینہ میں شامل ہونا یقینی طور پر ایک بہت بڑی ذمہ داری ہے  جسے  وہ پوری قوت کے ساتھ سرانجام دینے کی حتی الامکان کوشش کریں گے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ ہم آسٹریلوی عوام کی معیار زندگی کو بہتر بنانے کے لیے اسی طرح مل کر کام کریں۔

علاوہ ازیں، این ایلی کا وفاقی کابینہ کا حصہ بننے کے بعد کہنا ہے کہ میں آسٹریلوی کابینہ میں شامل ہونے والی پہلی مسلمان خاتون ضرور ہوں لیکن آخری نہیں۔ میں نے ان خواتین کیلئے دروازے کھولے ہیں جو سیاست میں اپنا کیریئر بنانا چاہتی ہیں۔

مزید پڑھیں:  جیل بھرو تحریک؛ گوجرانوالہ سے 45 پی ٹی آئی کارکنوں کی گرفتاریاں
جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.