علی امین گنڈا پور خیبرپختونخوا کے وزیراعلیٰ منتخب

11

خیبرپختونخوا اسمبلی کا اجلاس ڈیڑھ گھنٹے کی تاخیر کے بعد شروع ہوا، نومنتخب سپیکر بابر سلیم سواتی خیبرپختونخوا اسمبلی اجلاس کی صدارت کی ، نئے وزیراعلیٰ کے انتخاب کیلئے ووٹنگ کروائی گئی۔ آزادامیدوار علی امین گنڈاپور 90 ووٹ لے کرکامیاب ہوئے ، وزیراعلیٰ کے انتخاب کے لیےمجموعی طور پر 106 ووٹ ڈالے گئے۔نئے وزیراعلیٰ کے لیے علی امین گنڈا پور کا مقابلہ مسلم لیگ (ن) کے امیدوار عباد اللہ خان سے ہوا، علی امین گنڈا پور کے مدمقابل عباداللہ نے 16 ووٹ حاصل کیے۔نومنتخب وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا علی امین گنڈا پور نے اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہا ہے کہ بانی پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کا شکرگزار ہوں، انشااللہ امیدوں پر پورا اتروں گا۔

ان کا کہنا تھا کہ آزاد حیثیت سے وزیراعلیٰ بنا ہوں، ہماری پارٹی اور لیڈر شپ سے جو زیادتی ہوئی وہ دنیا میں کہیں نہیں ہوئی، 17 سال سے رکن پی ٹی آئی ہوں۔انہوں نے کہا کہ حقیقی آزادی ہماری ضرورت تھی ، ہے اور رہے گی، بانی پی ٹی آئی کوجعلی پرچوں میں جیل میں ڈالاگیاہے، بانی پی ٹی آئی کا اوپن ،صاف اور شفاف ٹرائل ہونا چاہیے، ہماری پارٹی خواتین کے ساتھ جو ظلم ہوا اس کا ازالہ کیا جائے ، آپ اپنی اصلاح کریں،ہم انتقامی کارروائی نہیں چاہتے ، خیبر پختونخوا، یہ ملک ،ادارے اور ریاست ہماری ہے۔
نومنتخب وزیراعلی خیبرپختونخوا علی امین گنڈا پور نے چیف الیکشن کمشنر سے مستعفی ہونےکا بھی مطالبہ کردیا، ان کا کہنا تھا کہ پوری دنیا نے کہا کہ الیکشن شفاف نہیں ہوئے، الیکشن کمیشن کا کام شفاف انتخابات کرانا ہے۔

مزید پڑھیں:  سعودی ولی عہد کی مسجد نبوی میں روضئہ رسولﷺ پر حاضری
جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.